دنیا بھر کی حکومتیں صحافی حضرات کے تحفظ کو یقینی بنائیں,چیف اکرام الدین

Spread the love

دنیا بھر میں آج یوم آزادی صحافت منایا جا رہا ہے۔سربراہ جزبہ اتحاد یونین آف جرنلسٹ یورپین آرگنائزیشن

جرمن(انٹرنیشنل ڈسک)گلوبل ٹائمز میڈیا رپورٹ کے مطابق جزبہ اتحاد یونین آف جرنلسٹ یورپین آرگنائزیشن کے سربراہ اکرام الدین نے کہا کہ دنیا بھر میں تمام حکومتوں سے مطالبہ ہے کہ آزادی صحافت کو یقینی بنانے کیلئے اہم اقدامات کریں اور میڈیا کی آزادی کے تحفظ کو یقینی بنائیں انہوں نے کہا کہ کرونا وائرس عالمی وبا کے دوران حکومتیں صحافیوں کی مدد کریں حکومتی مدد سے صحافی حضرات اپنے فرائض انجام دیں کرونا وائرس وبا کے تناظر میں صحافیوں کی سہولتوں کا خیال رکھنا ضروری ہے اج دنیا بھر میں آزادی صحافت کا عالمی دن منایا جا رہا ہے سنہ 1992 سے 2020 تک دنیا بھر میں ہزاروں صحافی پیشہ ورانہ فرائض کی انجام دہی کے دوران جانوں کا نذرانہ پیش کر چکے ہیں عالمی سطح پر یوم آزادی صحافت کا آغاز سنہ 1993 میں ہوا تھا جب اس دن کی باقاعدہ منظوری اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی نے دی تھی یہ دن منانے کا مقصد پیشہ ورانہ فرائض کی بجا آواری کے دوران صحافیوں اور صحافتی اداروں کو درپیش مشکلات، مسائل دھمکی آمیز رویوں اور زندگیوں کو درپیش خطرات کے متعلق قوم اور دنیا کو آگاہ کرنا ہے دنیا بھر میں اس دن کے انعقاد کی ایک وجہ معاشرے کو یی یاد دلانا بھی ہے کہ عوام کو حقائق پر مبنی خبریں فراہم کرنے کیلئے کتنے ہی صحافی اس دنیا سے چلے گئے اور کئی پس دیوار زنداں ہیں جزبہ اتحاد یونین آف جرنلسٹ یورپین آرگنائزیشن کے سربراہ اکرام الدین نے یوم آزادی صحافت کے موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ صحافت کی آزادی اور عوام تک بروقت درست معلومات کی فراہمی میں صحافیوں نے ہمیشہ اہم کردار ادا کیا ہے جو قابل تعریف ہیں دنیا بھر اور خاص کر پاکستان میں ہمیشہ صحافیوں کو تشدد کا نشانہ بنایا گیا ہے صحافیوں کی غلطی بس صرف یہ ہے کہ صحافی حضرات ہمیشہ کرپٹ نظام، منشیات اور دیگر واردت میں ملوث افراد کی نشاندہی کرتی ہے جن کی وجہ سے ہمیشہ صحافیوں پر تشدد ہوتا ہے صحافیوں کو دھمکیاں مل رہی ہے صحافیوں کو نامعلوم افراد کی طرف سے قتل ہو رہے ہے جو قابل مذمت ہے حکومت وقت صحافیوں کیےتحفظ کو یقینی بنانے کیلئے اہم اقدامات کریں تا کہ صحافیوں کو تحفظ مل سکے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں