پنڈدادنخان تحصیل ہیڈکواٹر ہسپتال کے فرنٹ لائن سولجر چار دن سے غائب۔۔مریض لاوارث

Spread the love

پنڈدادنخان (راشدخان)
پنڈدادنخان تحصیل ہیڈکواٹر ہسپتال کے فرنٹ لائن سولجر چار دن سے غائب۔۔مریض لاوارث
ڈیوٹی ڈاکٹروں کی ہٹ دھرمی شریف النفس ایم ایس کے احکامات ماننے سے انکار۔ایڈمن انچارج نے کاغذوں میں زیادہ ڈاکٹروں کی موجودگی ظاہر کر کے تحصیل بھر کی عوام سے بھونڈا مذاق کیا۔۔
سی ای او ڈاکٹرمحمد وسیم نے واقع کا نوٹس لیتے ہوئے ڈیوٹی سے غائب غیر ذمہ داری پر ڈاکٹروں کو شوکاز نوٹس جاری کر دیے
تفصیلات کے مطابق تحصیل ہیڈ کواٹر ہسپتال میں روٹین میں چوبیس سے زائد ڈاکٹر تعینات ہیں جو حالیہ وبائی صورت حال میں قائم کورونا وارڈ کے ساتھ دیگر شعبہ جات میں خدمات سر انجام دیتے ہیں ملک میں جاری لاک ڈاون اور وبائی دور میں حکومت کی جانب سے عید الفطر کی چھے چھٹیوں کے اعلان پر ہسپتال کے ایڈمن نے فراغ دلی کا مظاہرہ کرتے ہوئے کورونا سیکشن کے ذمہ دار ڈاکٹر سمیت تمام ڈاکٹرز کو چھٹی دے دی۔اور ایک شفٹ میں ایک ڈاکٹر کی ڈیوٹی لگاکر خابہ پری کر کے جان چھڑا لی۔ جو کسی طور عوامی مفاد میں مناسب نہیں تھا عید کی چھٹیاں شروع ہونے سے قبل نامناسب ڈیوٹی روسٹر کی اطلاح مقامی میڈیا تک پہنچ گئی جس نے علاقے کی صورت حال اور حالات کی سنگینی کو سمجھتےہوئے فوری طور پر ڈی سی جہلم اور ڈاکٹر وسیم کو اگاء کیا تو انہوں نے ایم ایس ٹی ایچ کیو سے معلومات لیں اور ڈیوٹی روسٹر میں ڈاکٹرز کی تعداد بڑھانے کو کہا جس پر ایڈمنسٹریشن انچارج نے کمال مہارت سے انہیں مطمعن کرنے کے لیے کاغذی کاروائی میں ڈاکٹرز کی تعداد بڑھادی اور خود بھی چھٹی روانہ ہوگئے ۔۔لیکن انتہائی افسوس کی بات ایم ایس ڈاکٹر خالد فاروقی کے اطلاع دینے پر کسی ایک ڈاکٹر نے بھی ڈیوٹی پرفارم نہیں کی اور پہلے روسٹر کے مطابق ایک شفٹ میں پورے ہسپتال میں ایک لیڈی ڈاکٹر موجود رہی جبکہ کورونا وارڈ عید کے تمام دن لاوارث رہا جو انتہائی خطرناک ہے کیونکہ یہاں مثبت رزلٹ والے مریض بھی موجود ہیں۔گزشتہ ریکارڈ کے مطابق اس بار بھی درجنوں حادثات جن میں جان لیوا بھی ہیں رونما ہوئے ہیں اور دیگر جن میں ہیٹ سٹروک سمیت ایمرجنسی نوعیت کے مریضوں کا بھی رش رہا ہے۔جب اس ضمن میں سی ای او جہلم ڈاکٹر وسیم سے موقف لیا تو انہوں نے کہا کہ میں نے ڈاکٹرز کی اس غیر زمہ داری پر ایکشن لیتے ہوئے انہیں شوکاز نوٹس دے دیا ہے ان سب کو جواب دینا ہوگا۔۔۔ٹی ایچ کیو ہسپتال میں پریشان حال مریضوں سمیت کورونا کے بے یارومددگار مریضوں کا کہنا ہے کہ ساری قوم ڈاکٹروں کو خراج تحسین پیش کر رہی ہے انہیں سلوٹ اور سلامیاں پیش کی جارہی ہیں کہ یہ فرنٹ لائن پر عوام کے لیے دستیاب ہیں تاہم اس ہسپتال میں الٹی گنگا بہہ رہی ہے عید الفطر پر دیگر انسانی خدمت کے ادارے جیسے 1122 ،میونسپل، پولیس کی چھٹیاں منسوخ ہوئی ہیں یہاں دستیاب ڈاکٹروں کو خود ہسپتال انتظامیہ نے گھروں کو بھیج دیا ہے جس سے ان کی عوامی بہبود سے عدم دلچسپی واضع ہے۔۔اعلی حکام اس نا اہلی پر نوٹس لیکر کاروائی کریں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں