مشیر تجارت کی ذاتی کمپنی میں ملازمین کا معاشی قتل

Spread the love

ڈیسکون پاور سلوشن سے درجنوں ملازمین نکال دئے گئے

اسلام آباد (اردو گلوبل) وزیر اعظم پاکستان کے مشیر تجارت عبد لرزاق داؤد کے صاحبزادے تیمور داؤ کی کمپنی ڈیسکون پاور سلوشن سے تیس ملازمین کو یکمشت فارغ کر دیا گیا جبکہ کمپنی کے ہیڈ ہیومن ریسورس فیصل قریشی نے کچھ روز قبل ملازمین کی جانب سے ایک احتجاجی کال پر وعدہ کیا تھا کہ کسی کو جبراً رخصت نہیں کیا جائے گا۔ مزید تفصیلات کے مطابق ڈیسکون پاور سلوشن ڈیسکون گروپ کی ذیلی کمپنی ہے جس کے مالک مشیر تجارت پاکستان عبد الرزاق داؤد تھے اور اب اس کی ملکیت ان کے صاحبزادے تیمور داؤد کے پاس ہے۔ اردو گلوبل کو فراہم معلومات کے مطابق وزیر اعظم پاکستان کے ملازمین کو کمپنیوں سے نہ نکالے جانے کے واضح احکامات کے باوجود ان کے اپنے مشیر تجارت کی جانب سے غریب مزدوروں اور ورکرز کا معاشی قتل عام جاری ہے اور اب تک تیس ملازمین کو پہلے مرحلے میں ایک ماہ کے نوٹس پر فارغ کر دیا گیا ہے۔ ذرائع کے مطابق ڈیسکون کی خفیہ پالیسیوں میں شامل ہے کہ بوقت ضرورت افرادی قوت بڑھائی جائے اور ضرورت پوری ہونے کے بعد ملازمین کو فارغ کر دیا جائے۔ نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پر ڈیسکون کے ایک ملازم نے اردو گلوبل کو بتایا کہ جن تیس افراد کو فراغت کا نوٹس جاری کیا گیا ہے ان سے وعدہ کیا گیا تھا کہ کسی کو فارغ نہیں کیا جائے گا جبکہ ہیڈ ہیومن ریسورس فیصل قریشی کمپنی مالکان کی خوشنودی حاصل کرنے کے لئے مزید افراد کی فہرست بھی تیار کر رہے ہیں۔

Please follow and like us:

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں