جہلم شہر و گردونواح میں وبائی امراض، کھانسی‘ زکام‘ بخاروغیرہ تیزی سے پھیلنے لگے

Spread the love

جہلم(چوہدری عابد محمود +عمیراحمدراجہ)جہلم شہر و گردونواح میں وبائی امراض، کھانسی‘ زکام‘ بخاروغیرہ تیزی سے پھیلنے لگے۔ شہر میں رات و صبح کے وقت درجہ حرارت میں کمی کے سبب موسم تبدیل ہونے لگا۔ بچوں پر اس موسم کی تبدیلی کے اثرات نمایاں ہونے لگے۔ تفصیلات کے مطابق شہر و گردونواح میں اچانک موسم کی تبدیلی کے سبب ہونے والی وبائی امراض کا حملہ شروع ہو چکا ہے اور شہری ایک مرتبہ پھر دواخانوں اور ہسپتالوں کے چکر کاٹنے پر مجبور ہو چکے ہیں۔ شہری علاقوں میں رات دیر تک دواخانوں میں مریضوں کی بڑی تعداد دیکھی جارہی ہے۔ شہر کے مختلف مقامات پر بچوں کے ان امراض میں مبتلاء ہونے کی شکایات بھی موصول ہو رہی ہیں۔ بتایا جاتا ہے کہ موسم میں ہونے والی تبدیلی کے اثرات بچوں کی صحت پر رونما ہو رہے ہیں۔ گذشتہ دنوں سے رات اور صبح میں درجہ حرارت میں کمی اور دن میں گرمی کے سبب جو صورتحال پیدا ہو رہی ہے اس کے مضر اثرات انسانی صحت پر مرتب ہورہے ہیں۔ ماہرین صحت کا اس حوالے سے کہنا ہے کہ درجہ حرارت میں کمی اور سردی میں اضافہ و تبدیلی موسم کے دوران بچوں کی صحت کے متعلق احتیاط برتنے کی ضرورت ہے علاوہ ازیں موسم کی تبدیلی کا اثر جسم کی دفاعی صلاحیتوں پر بھی ہوتا ہے اسی لئے ایسے موسم میں بچوں اور ضعیف العمر افراد کوکافی محتاط رہنا چاہئے۔ سول ہسپتال جہلم کے شعبہ اطفال کے ماہرڈاکٹر ز کا کہنا ہے کہ ایسے موسم میں بچوں کی خصوصی نگہداشت کی جانی ضروری ہے کیونکہ بچوں کی صحت پر دھوپ کی گرمی اور ٹھنڈی ہواؤں کے سبب مضر اثرات مرتب ہوتے ہیں۔ ہسپتالوں سے رجوع کرنے والے بیشتر مریضوں کی شکایات میں بخار‘ سردی‘ کھانسی اور نزلہ جیسے امراض شامل ہیں جو عام مرض کی طرح ہیں لیکن اس حوالے سے ماہرین صحت کا کہنا ہے کہ شہریوں کو چاہیے کہ وہ بیماری کی صور ت میں فوری اپنے معالج سے رجوع کریں تاکہ بیماریوں سے چھٹکارہ حاصل کیا جا سکے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں