کرپشن کے خلاف آہنی ھاتھ استمعال کرنے پر بد عنوان عناصر نے اوچھے ہتھکنڈے شروع کر دئے

Spread the love

وزیرآباد (نامہ نگار ) کرپشن کے خلاف آہنی ھاتھ استمعال کرنے پر بد عنوان عناصر نے اوچھے ہتھکنڈے شروع کر دئے.دیانت دار افسروں کو انکوائری میں الجھا دیا گیا.تفیصلات کے مظابق بد عنوانی ثابت ھونے پرمحکمہ ھیلتھ گوجرانوالہ کے ھیڈ کلرک محمود کو برطرف جبکہ سپریٹنڈنٹ علی اصغر کو تبدیل کر دیا گیا جس پر انھوں نے انتقامی کارروائی کے طور پر چیف ایگزیکیٹو آفیسر ھیلتھ گوجرانوالہ ڈاکٹر فرجاد بٹ اور ڈسٹرکٹ ھیلتھ آفیسر صوفیہ بلال کے خلاف درخواست بازی شروع کر دی.سیکریٹری ھیلتھ پنجاب کیپٹن عثمان نے کمشنر گوجرانوالہ کو انکوائری آفسر مقرر کیا مگر بدعنوان عناصر نے کمشنر گوجرانوالہ پر عدم اعتماد کر دیا جس پر ڈائریکٹر ھیلتھ لاھور ڈاکٹر اقتدار کو نیا انکوائری آفسر مقرر کیا گیا مگر درخواست بازوں نے ان پر بھی عدم اعمتاد کر دیا اور اس طرح دیانت رات آفسر انکوائری کے جھمیلوں میں پھنس کر رہ گئے. انجمن تحفظ حقوق عوام کے صدر افتحار احمد بٹ.انجمن اصلاح اخلاق عامہ کے صدر شیخ صلاح الدین نے اپنے بیان میں دیانتدار افسران کے خلاف انتقامی کارروائی کی شدید مذمت کرتے ھوئے کہا ھے کہ کرپشن سے پاک معاشرے کے خواب کو پورا کرنے کے لئے دیانت دار افسروں کو تحفظ دیا جائے اور کرپٹ عناصر کو نشان عبرت بنایا جایے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں