قتل میں ملوث مجرمان عدالت میں سیلفی بنا رہے ہیں مجھے سرعام حراس کر رہے ہیں۔ام رباب چانڈیو

Spread the love

میرے خاندان کے قتل میں ملوث مجلرمان کو ابھی تک عدالت کی سزا نہیں ملی جب کے یہ کیس عدالتی نظام پر بڑا سوالیاں نشان ہے۔میڈیا سے گفتگو

سندھ(نمائندہ خصوصی)گلوبل ٹائمز میڈیا رپورٹ کے مطابق سندھ کی بیٹی ام رباب چانڈیو نے کہا کہ مختیار چانڈیو، دادا کرم اللہ چانڈیو، اور چچا قابل چانڈیو کے قتل میں ملوث ملزمان عدالت میں سیلفی بنا رہے ہیں لیکن حکومت وقت اور عدالت عظمی خاموش تماشائی بنی ہوئی ہے جو افسوس ناک ہے انہوں نے کہا کہ قتل میں ملوث ملزمان کو ابھی تک عدالتی سزا نہیں ملی کیا سردار چانڈیو اور برہان چانڈیو عدالت سے بھی زیادہ طاقت وار ہیں تین قتل کرنے کے باوجود ابھی تک سردار چانڈیو اور برہان چانڈیو عدالت کے سلاخوں کے باہر تین سالوں سے عبوری ذمانت پے ہیں کیا ایسے ظالم لوگوں کیلئے کوئی قانون اور سزا نہیں ہے سندھ کی بیٹی ام رباب چانڈیو نے روزنامہ گلوبل ٹائمز یورپ اخبار کے ساتھ ایک اخباری بیان میں کہا کہ اج کیا ہمارا قانون اور عدالت اتنا کمزور ہو گیا کہ قتل میں ملوث ملزمان عدالت میں وڈیرا شاہی کرکے سیلفی بنا رہے ہیں اور ہماری عدالتیں انکو کچھ بھی نہیں کہہ سکتا جو افسوس کا مقام ہے عدالت سزا اور جزا کی جگہ ہے لیکن اج لگتا ہے عدالتوں میں مظلوم کیلئے کوئی انصاف نہیں اور سرداروں اور جاگیرداروں کیلئے کوئی سزا نہیں جو عدالت کی توہین ہے اس موقع پر علاقہ عمائدین نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ پ پ رکن سندھ اسمبلی تہرے قتل / ام رباب کیس کہ مرکزی کردار ادا کرنے والا ملزمان برہان چانڈیو نے ام رباب چانڈیو اور انکے اہل خانہ کو دھمکانہ اور میہڑ آنے شروع کر دیا اعلیٰ اداروں کو نوٹس لینے کی اپیل ہے انہوں نے کہا کہ میہڑ میں پھر سے خون ریزی ہونے کہ خدشات ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں