پیپلز پارٹی سندھ کا وفاقی حکومت کی طرف سے سندھ سے ذیادتیوں کے خلاف قومی شاہراہ پر دھرن

Spread the love

جیکب آباد(نامہ نگار) جیکب آباد میں پیپلز پارٹی سندھ کا وفاقی حکومت کی طرف سے سندھ سے ذیادتیوں کے خلاف قومی شاہراہ پر دھرنا، سینکڑوں خواتین و کارکنان کی شرکت،وفاقی حکومت کے خلاف نعریبازی۔ تفصیلات کے مطابق جیکب آباد میں پاکستان پیپلز پارٹی سندھ کی جانب سے وفاقی حکومت کی ظالمانہ پالیسیوں اور سندھ کے عوام کے ساتھ کی جانیوالی زیادتیوں، پانی کی بندش، بجلی اور گیس کی لوڈشیڈنگ، ہزاروں ملازمین کی برطرفیوں اور این ایف سی ایوارڈ کا اجراء نہ ہونے کے خلاف قومی شاہراہ زیرو پوائنٹ کے مقام پر سینکڑوں کارکنان نے صوبائی صدر نثار احمد کھوڑو، صوبائی مشیر اعجاز حسین جکھرانی، رکن صوبائی اسمبلی ممتاز حسین جکھرانی، ڈاکٹر سہراب سرکی، ضلع صدر لیاقت علی لاشاری اور دیگر کی قیادت میں دھرنا دیا، دھرنے کی وجہ سے بلوچستان سے سندھ اور سندھ سے بلوچستان کی جانب آنے جانے والی ٹریفک معطل ہوگئی اور دونوں اطراف سے سینکڑوں گاڑیوں کی قطاریں لگ گئی، پیپلز پارٹی کے کارکنان نے وفاقی حکومت کے خلاف نعریبازی کی، دو گھنٹوں تک جاری رہنے والے دھرنے کے دوران مظاہرین سے صوبائی، ڈویژنل، ضلعی عہدیداران، اراکین صوبائی اسمبلی، ذیلی تنظیموں کے عہدیداران نے خطاب کیا، دھرنے سے صوبائی صدر نثار کھوڑو،صوبائی مشیر اعجاز حسین جکھرانی اور دیگر نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کہ وفاقی حکومت سندھ سے سوتیلی ماں جیسا سلوک کر رہی ہے، سندھ کو اس کے حصے کا پانی نہیں دیا جارہا، زرعی پانی کی قلت کی وجہ سے آبادگار پریشان ہیں فصلیں تباہ ہو رہی ہیں جس سے ملکی معیشت بھی متاثر ہوئی ہے، انہوں نے کہا کہ وفاق کے نااہل حکمرانوں نے عوام کا جینا محال کردیا ہے جن لوگوں کو شہید بینظیر بھٹو کے دور میں نوکریاں ملیں تھیں وفاق نے سندھ کے ان 16 ہزار سے زائد ملازمین کو فارغ کردیا ہے موجودہ حکمران عوام کو روزگار دینے کے بجائے بے روزگار کررہے ہیں، حکمران عوام کا معاشی قتل عام کررہے ہیں، انہوں نے کہا کہ غربت اور بیروزگاری میں اضافہ جو اس حکومت میں ہوا اس کی ماضی میں کوئی مثال نہیں ملتی، انہوں نے کہا کہ سندھ میں بجلی اور گیس لوڈشیڈنگ سے عوام سخت پریشان ہے، پیپلز پارٹی نے وفاقی حکومت کی ذیادتیوں کے خلاف تحریک شروع کردی ہے ہمارا احتجاج حقوق کے حصول تک جاری رہے گا اس سلسلے میں سندھ کے مختلف اضلاع میں احتجاجی دھرنے دئیے جائیں گے، انہوں نے کہا کہ سندھ کے عوام کے حقوق پر ڈاکہ اور ذیادتیاں کسی صورت برداشت نہیں کی جائیں گی، انہوں نے کہا کہ پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری ملک میں حقیقی اپوزیشن کا کردار اور عوام کے بنیادی مسائل پر آواز بلند کررہے ہیں اس لیے اب قوم کی نگاہیں صرف بلاول بھٹو زرداری پر ہی ہیں جلد عوام کو نااہل حکمرانوں سے نجات دلا کر ہی رہیں گے۔ ادھر دوسری جانب بائی پاس پر دھرنے میں خواتین کارکنان پینے کے پانی کی بوتلوں پر لڑپڑیں اور پانی کی بوتلوں پر چھینا جھپٹی کی گئی ضلعی رہنما نے ایک خاتون کارکن سے پانی کی بوتل چھین لی جبکہ پارٹی جھنڈوں پر جیالے گتھم گتھا ہو تے ہوئے نظر آئے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں