قو میں اللہ تعالیٰ نے انسان کی پہچان کیلئے بنائی ہیں ،مغل اتحاد کنونشن سے مقررین کا خطاب

Spread the love

ہڑپہ(چوہدری محمد آ صف ندیم سے)،قو میں اللہ تعالیٰ نے انسان کی پہچان کیلئے بنائی ہیں ہم آپس میں پیار محبت اور اتفاق سے اپنی پہچان بہتر انداز میں کروا کر دوسروں کیلئے مثال بن سکتے ہیں ،ان خیالات کا اظہار مغل برادری کے اکٹھ جسے مغل اتحاد کا نام دیا گیا تھا سے مقررین نے خطاب کرتے ہوئے کیا ،مغل اتحاد کا یہ بے مثال اکٹھ ہڑپہ کی تاریخ میں پہلا اجتماع تھا جس میں علاقہ ہڑپہ اور گردونواح سے تعلق رکھنے والے مغل برادری کے افراد نے بڑے تعداد میں شرکت کی مغل اتحاد کے اس کنونشن کے مہمان خصوصی معروف بزنس مرزا محمد اکرام ،اکرام اینڈ کو رائس مل والے اور ان کے ہمراہ ہڑپہ کی معروف شخصیت مہر محمد نواز جمیل آئل مل والے بھی تھے مہمانان خصوصی کا استقبال ڈھول کی تھاپ پھولوں کی پتیاں نچھاور اور گلے میں پھولوں کے ہار ڈال کر کیا گیا کنونشن کا باقائدہ آغاز تلاوت قرآن پاک اور ہدیہ نعت رسول مقبول ﷺسے کیا گیا کنونشن کے مہمانان خصوصی سے مغل اتحاد کے سرپرست اعلیٰ مرزا محمد اسحاق ،اور نو متخب عہدداران ،چیئرمین ،مرزا اسلم بیگ ،وائس چیئرمین،مرزا اعجاز احمد بیگ ،صدر ،مرزاتنویربیگ،سنیئرنائب صدر،لیاقت علی مجاہد ،نائب صدر،مرزا ڈاکٹر تنویر ،نائب صدر ،عابد مشتاق،جنرل سیکرٹری ،مرزاعرفان مشتاق،ڈپٹی جنرل سیکرٹری ،ارباب جاوید ،فنانس سیکرٹری ،مرزاندیم مغل ،ڈپٹی فنانس سیکرٹری ،مرزاعلی فرید،اور،سیکرٹری نشرواشاعت، مظہر اسماعیل ،کا تعارف کروایا گیا مہمانان خصوصی نے مغل اتحاد کی تشکیل پانے والے تنظیمی ڈھانچے کے عہدداروں کے گلے میں پھولوں کے ہار ڈال کر حلف وفاداری لیا،تقریب سے منتخب ہونے مغل اتحاد کے عہداران اور مہمانان خصوصی نے مغل اتحاد قائم کرنے کے اغراض ومقاصد بیان کرتے ہوئے کہا کہ ہمارا اولین مقصد اپنی برادری کے پسے ہوئے لوگوں کو اوپر لاناہمارا کوئی سیاسی یا کوئی اور مقصد نہیں بلکہ اپنی مغل برادری کوایک پلیٹ فارم پر اکٹھا کرکے اس کا کھویا ہوا مقام دلانا ہے اپنی برادری کے معاملات دوسروں کو بتا کر جگ ہنسائی بننے کی بجائے ہم اسے اپنی برادری کے اندر ہی رہ کرنمٹائیں گےہماری سوچ یہ ہونی چاہیے کے ہ میں بڑا آدمی نہیں بننا بلکہ ایک دوسرے کی مدد کر کے بڑا انسان بننا ہے مغل اتحاد کنونشن کے اختتام پر شریک ہونے والے شرکاء کیلئے ریفریشمنٹ کابھی وسیع انتظام کیا گیا تھا ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں